یوم استحصال کشمیر۔۔۔وزیر اعظم پاکستان کا خصوصی پیغام

اسلام آباد(رم نیوز) وزیراعظم پاکستان شہباز شریف نے یوم استحصال کشمیر کے موقع پر خصوصی پیغام میں کہا ہے پاکستان اپنے کشمیری بھائیوں اور بہنوں کی آواز بنا رہے گا، ان کی قربانیاں اس وقت بھی جاری ہیں ۔ ہم ان کے حقوق کے مکمل حصول اور حق خود ارادیت کے لیے ہر ممکن تعاون کرتے رہیں گے۔ بھارت کے 5 اگست 2019 کو مقبوضہ جموں و کشمیر میں غیر قانونی اور یکطرفہ اقدامات، کشمیری عوام کے ناقابل بیان مصائب پر بے حسی کو جاری رکھا ہوا ہے اوراس کو تین برس ہوچکے ہیں۔بھارتی حکومت، بی جے پی اور آر ایس ایس کے گٹھ جوڑ کے زیر اثر، چوتھے جنیوا کنونشن سمیت اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں اور بین الاقوامی قانون کی صریحاً خلاف ورزی کر رہی ہے۔ کشمیری عوام ابھی تک فوجی محاصرے میں ہیں، ان کی اعلی حریت قیادت بدستور قید ہے ۔

توقع تھی کشمیری عوام نے بڑی جرات اور دلیری سے اپنے خلاف بھارتی مظالم کی مہم کو ناکام بنایا ہے۔ پاکستان نے کشمیریوں کے جائز مقصد کے حصول کے لیے ان کی ہر ممکن مدد کی ہے۔یہ بات قابل افسوس ہے کہ مقبوضہ جموں و کشمیر میں بھارت انسانی وقار، انصاف اور انصاف کے عالمی نظریات کی کھلم کھلا خلاف ورزی کر رہا ہے۔ شہباز شریف نے کشمیریوں کی دلیری کو سلام پیش کرتے ہوئے کہا کہ یہ کشمیری عوام کی بے مثال قوت ارادی اور ہمت ہے جس نے انہیں دہشت گردی اور محکوم بنانے کی ہر بھارتی کوشش کا مقابلہ کرنے کے قابل بنایا ہے۔ جموں و کشمیر کا تنازع سات دہائیوں سے زیادہ عرصے سے اقوام متحدہ کے ایجنڈے پر ہے۔ جیسے ہی مقبوضہ جموں و کشمیر کا محاصرہ چوتھے سال میں داخل ہو رہا ہے، کشمیر کے لوگ بنیادی حقوق آزادی اور انسانی وقار کے ساتھ ساتھ دنیا بھر میں بھارت کے مظالم کے خاتمے کے لیے عملی اقدامات کے لیے اپنی حمایت کرنے والوں کی طرف امید دیکھ رہے ہیں ۔